Thursday | 14 November 2019 | 17 Rabiul-Awal 1441

Fatwa Answer

Question ID: 63 Category: Business Dealings
Method for Distributing Parents' Estate

Assalamualaikum Warahmatullah, Respected Hazrat Mufti Sahib Damat Barakatuhum

My father passed away 8 years back in Gulbarga Shareef (Karnataka State, India). Recently (January 2017) my mother also passed away. Please make dua that may Allah Subhanahu Wa Ta‘ala forgives my parents and give them a high rank in Jannatul-Firdaus (aameen).

I have two elder brothers, I am on the third position and there is one more brother after me. We are all married. In the parents’ estate there is a farm in Aeena-Poor, a house and adjacent to the house there is a piece of land which is also in Gulbarga Shareef. We are originally from Telangana but since my father was working in the Gulbarga Court (which was previously part of Nizam’s State) our education etc. was done there. Now we only go to Gulbarga Shareef for vacation or when the crops are being harvested.

The farm is about 14 to 15 acres of which 1 acre is water and the rest is dry. The house has two levels whereas the piece of land is around 40x60 in area.

How will this estate be distributed among the inheritors? Currently in the house me and my younger brother are living on the two levels. Please provide your guidance in this matter. JazakAllah Khair

Walaikumassalam Warahmatullah

الجواب وباللہ التوفیق

May Allah Subhanahau Wa Ta‘ala bestow maghfirah upon your father and mother, may He illuminate their graves with noor and give them great ranks in Jannah, aameen. As far as the division of estate is concerned, since it has been mentioned in the question that the estate belonged to your parents, and your father passed away 8 years back, and your mother recently passed away, we would like to request the details of which of your father’s relatives were alive when he passed away. Similarly, let us know if you and your siblings were your mother’s only living relatives at the time of her death or are there any more of her relatives alive. Once this detail has bee provided, we can provide a detailed answer to your question.

فقط واللہ اعلم بالصواب

Question ID: 63 Category: Business Dealings
مرحوم والدین کی میراث کی تقسیم کا طریقہ

 

 

السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ محترم المقام عالی جناب حضرت مفتی صاحب دامت برکاتہم

ہمارے والد صاحب کا انتقال گلبرگہ شریف (ریاست کرناٹکا، انڈیا ) میں ۸ سال قبل ہوا۔ اب حال ہی میں یعنی یکم جنوری ۲۰۱۷ کو ہماری والدہ کا بھی انتقال ہوگیا۔ دعا فرمائیے کہ اللہ پاک ہمارے والدین کی مغفرت فرمائے اور جنت الفردوس میں ان کو اعلی مقام عطا فرمائے (آمین ثم آمین)۔

ہمارے دو بڑے بھائی ہیں ، میں تیسرے نمبر پر ہوں، اور میرے بعد ایک اور بھائی ہے۔ ہم سب کی شادیاں ہو چکی ہیں ۔ والدین کے ترکہ میں کھیت کی کچھ زمین ہے جو آئینہ پور میں ہے، ایک مکان اور اسی مکان کو لگ کر ایک خالی پلاٹ بھی ہے جو گلبرگہ شریف میں ہے۔ ہمارا وطنِ اصلی تلنگانہ ہے چونکہ والد صاحب کی ڈیوٹی گلبرگہ کورٹ میں تھی (جو اس وقت نظام سرکار میں شامل تھا)، ہماری تعلیم وغیرہ گلبرگہ میں ہی ہوئی۔ اب چھٹیاں گزارنے یا فصل کے کٹنے کے موقع پر وہاں جانا ہوتا ہے۔

کھیت کی زمین قریب ۱۴ /۱۵ ایکڑ کے قریب ہے (جس میں ایک ایکڑ تری اور باقی خشکی ہے)اور مکان دو منزلہ ہے ، ساتھ لگی ہوئی زمین ۴۰ بائے ۶۰ رقبے کی ہے۔

اب اس مال میں وراثت کی تقسیم کیسے کی جائے گی؟ فی الحال اس دو منزلہ مکان میں اور میرے چھوٹے بھائی رہ رہے ہیں۔ براہ کرم اس سلسلے میں ہماری رہنمائی فرمائیے۔

 

 

وعلیکم السلام ورحمۃا للہ وبرکاتہ

الجواب وباللہ التوفیق

اللہ پاک آپ کے والد اور والدہ کی مغفرت فرمائے، ان کی قبر کو نور سے منور فرمائے،اور جنت میں اعلی مقامات انہیں عطا فرمائے، رہا تقسیم جائیداد کا مسئلہ تو سوال میں یہ مذکور ہے کہ وہ والدین کی جائیداد ہے اور والد کا انتقال ۸ سال پہلے ہوچکا ہے،اور اب والدہ کا انتقال ہوا ہے تو والد کے انتقال کے وقت ان کے کونسےرشتہ دار موجود تھے اور والدہ کے انتقال کے وقت آپ کے علاوہ کوئی اور رشتہ دار ان کے موجود تھے یا نہیں اس کی وضاحت کرکے مسئلہ معلوم کرلیں۔

فقط واللہ اعلم بالصواب